Project Description

What is Religion. How Religion evolved. The core theme of Religion. Power of Science.

Coming to my point every religion is basically a set of beliefs about cosmology that how everything around us is working, why and how it is created and what is its purpose.

Cosmology is the core theme of a religion

On earth religions evolved with human species and we have whole history of different types of religions from ancient Egyptians and greek mythology till Sikhism. In ancient times many mythological religions were established by their founders by way of telling their people that certain things were beneficial for them and for their survival like clouds, rain and sun etc. without which they couldn’t had crops. Then they built a complete theory of cosmology that how this all process works why sometime it rained and sometime it didn’t. Than they described their people the reasons because of which god becomes angry or pleased and that they need to please the god by giving something some sacrifice. Than they built a whole set of jurisprudence around that cosmology which included sacrifices, gifts to gods, gathering and worshipping at some specific day of the week to please the god. Even in the oldest religions of world this principal was working. Cosmology is the core the center the theme of a religion whether its a pseudo, mythological or a true religion.

Therefore you need to understand how this universe is working. How your Lord is running this universe in justice. Fine details of jurisprudence which are already there in scriptures will come later.

Science is the only knowledge of the universe all others are superstitions

Keep in mind in God’s religion there is no superstition, your Lord is one Lord and Religion is only one for all of you that is submission to The Only One The Almighty The All Wise. Laws of physics are the Laws of your Lord which we are exploring day by day. Through these laws your Lord is running this universe of yours. This is the only knowledge of the universe all others are superstitions. Remember science is  so much powerful that we would be considered as gods by those before us if we manage to go back just thousand years in the past. There is a quote from a physicist “Any sufficiently advanced technology is indistinguishable from divinity”

يُمكنني أنْ أدرك أنّ البرامج القليلة القادمة قد تصبح تقنية قليلًا بالنسبة للمُستمع العادي ولكن من المهم جدًا مُناقشة وتلخيص هذه القضايا الهامة قبل الدخول في المستوى التالي من هذا البرنامج. لنصل إلى وجهة نظري بخصوص أن كل دين هو في الأساس مجموعةٌ من المُعتقدات حول علوم الكون، كيف يعمل كل شيء من حولنا ، لماذا وكيف يتم إنشاؤه وما هو الغرض منه. على الأرض تطورت ديانات مُختلفة مع البشرية ولدينا تاريخٌ كامل من أنواع مختلفة من الأديان من المصريين القدماء والأساطير اليونانية حتى السيخية. في العصور القديمة تم تأسيس العديد من الديانات الأسطورية من قبل مؤسسيها عن طريق إخبار شعبهم بأن أشياءًا معينًاة كانت مفيدةً لهم ولبقائهم على قيد الحياة مثل الغيوم والمطر والشمس وما إلى ذلك، والذين لن يتمكنوا من الحصول على المحاصيل بدونها. ثم قاموا ببناء نظرية كاملةٍ لعلم الكونيات كيف أن هذه العملية كلها تعمل لماذا في بعض الأحيان تمُطر وأحيانًا لا. ثم وصفوا لشعبهم الأسباب التي تجعل الإله غاضبًا أو سعيدًا، وأنّهم بحاجةٍ لإرضاء الله من خلال تقديم أي شيء- بعض التضحية. ثم قاموا ببناء مجموعةٍ كاملةٍ من الفقه والعلم حول أن علم الكونيات التي شملت التضحيات والهدايا للآلهة، والتجمعات والعبادة في يوم معين من أيام الأسبوع كل ذلك يهدف إلى إرضاء الإله. حتى في أقدم الديانات في العالم كان هذا المبدء موجودًا. علم الكونيات هو جوهر، مركز، موضوع أي دين سواء كان زائفًا، أسطوريًا أو دينًا حقيقيًا.

لذلك عليك أن تفهم كيف يعمل هذا الكون. كيف يقوم ربك بتسير هذا الكون بعدالة. التفاصيل الدقيقة من الفقه التي توجد بالفعل في النصوص المُقدسة سيأتي ذكرُها في وقت لاحق. نضع في اعتبارنا أنّه في دين الله لا توجد خرافات، ربكم هو ربٌ واحد والدين هو واحدٌ ، وهوو الخضوع إلى الله الواحد سبحانه وتعالى الحكيم. قوانين الفيزياء هي قوانين ربك التي نستكشفها يومًا بعد يوم. من خلال هذه القوانين ربك يدير كونكم. هذه هي الحقيقة الوحيدة عن الكون كل الأشياء الأخرى خرافات. تذكر العلم قوي جدًا لدرجة أننا يُمكن أن نُعتبر آلهةً من قِبل من سبقونا إذا تمكنا من العودة فقط ألف سنة في الماضي. هناك اقتباس من فيزيائي ” التكنولوجيا المُتقدمة بما فيه الكفاية لا يُمكن تمييزها عن الألوهية”.

Chegando ao meu ponto, cada religião é basicamente um conjunto de crenças sobre a cosmologia que mostra como tudo ao nosso redor está funcionando, por que e como é criado e qual é o seu propósito. Na terra, as religiões evoluíram com espécies humanas e temos toda uma história de diferentes tipos de religiões, desde os antigos egípcios e mitologia grega até o sikhismo. Nos tempos antigos, muitas religiões mitológicas foram estabelecidas por seus fundadores, dizendo a seus povos que certas coisas eram benéficas para eles e para sua sobrevivência, como nuvens, chuva e sol, etc., sem as quais eles não poderiam ter culturas. Então eles construíram uma teoria completa da cosmologia de como esse processo todo funciona porque às vezes chovia e às vezes não. Do que eles descreveram o seu povo as razões pelas quais deus fica zangado ou satisfeito e que eles precisam agradar o deus, dando algo algum sacrifício. Eles construíram toda uma série de jurisprudência em torno daquela cosmologia que incluía sacrifícios, presentes a deuses, coleta e adoração em algum dia específico da semana para agradar ao deus. Mesmo nas religiões mais antigas do mundo, esse diretor estava trabalhando. A cosmologia é o núcleo central do tema de uma religião, seja ela uma religião pseudo, mitológica ou verdadeira.

Portanto, você precisa entender como esse universo está funcionando. Como seu senhor está correndo este universo na justiça. Detalhes finos da jurisprudência que já estão nas escrituras virão depois. Tenha em mente que na religião de Deus não há superstição, seu Senhor é um só Senhor e a religião é apenas uma para todos vocês que é submissão ao Único Todo Poderoso Todo Sábio. As leis da física são as leis do seu Senhor que estamos explorando dia a dia. Através dessas leis, seu Senhor está administrando esse seu universo. Este é o único conhecimento do universo que todos os outros são superstições. Lembre-se de que a ciência é tão poderosa que seríamos considerados deuses pelos que nos precederem se conseguirmos voltar apenas mil anos no passado. Há uma citação de um físico “Qualquer tecnologia suficientemente avançada é indistinguível da divindade”

Llegando a mi punto, cada religión es básicamente un conjunto de creencias acerca de la cosmología sobre cómo funciona todo lo que nos rodea, por qué y cómo se crea y cuál es su propósito. En la tierra, las religiones evolucionaron con las especies humanas y tenemos una historia completa de diferentes tipos de religiones desde los antiguos egipcios y la mitología griega hasta el sijismo. En la antigüedad, muchas de las religiones mitológicas fueron establecidas por sus fundadores al decirle a su gente que ciertas cosas eran beneficiosas para ellos y para su supervivencia, como nubes, lluvia y sol, etc. sin los cuales no podían cultivar. Luego construyeron una teoría completa de la cosmología sobre cómo funciona todo este proceso por qué alguna vez llovió y en algún momento no. Entonces ellos describieron a su gente las razones por las cuales Dios se enoja o complace y que necesitan agradar al dios sacrificando algo. Que construyeron un conjunto completo de jurisprudencia en torno a esa cosmología que incluía sacrificios, obsequios a los dioses, reunión y adoración en algún día específico de la semana para complacer al dios. Incluso en las religiones más antiguas del mundo este director estaba funcionando. La cosmología es el centro del tema de una religión, ya sea una religión pseudo, mitológica o verdadera.

Por lo tanto, necesitas entender cómo funciona este universo. Cómo tu Señor dirige este universo en justicia. Los detalles precisos de la jurisprudencia que ya están allí en las escrituras llegarán más tarde. Tenga en cuenta que en la religión de Dios no hay superstición, que su Señor es un solo Señor y que la religión es solo una para todos ustedes que es sumisión al Único El Todopoderoso El Todo Sabio. Las leyes de la física son las Leyes de tu Señor que estamos explorando día a día. A través de estas leyes, tu Señor dirige este universo tuyo. Este es el único conocimiento del universo; todos los demás son supersticiones. Recuerde que la ciencia es tan poderosa que los que nos precedieron podrían considerarnos como dioses si logramos retroceder miles de años en el pasado. Hay una cita de un físico “Cualquier tecnología suficientemente avanzada es indistinguible de la divinidad”

میری بات پر آتے ہیں ۔ ہر مذہب بنیادی طور پر  علم ِ کائنات ہر مبنی  عقائد کا ایک مجموعہ ہے کہ ہمارے ارد گرد ہر چیز کیسے کام کر رہی ہے، اسے کیوں اور کیسے تخلیق کیا گیا اور اس کا مقصد کیا ہے۔  زمین پر بنی نوع انسان کے  ارتقا کے ساتھ مذاہب نے بھی  نشو نما پائی۔ اور ہمارے پاس قدیم مصریوں اور یونانی  داستانوں  سے لےکر سکھ مت تک   مختلف طرح کے مذاہب کی ایک مکمل تاریخ ہے ۔ قدیم زمانوں میں  بہت سے افسانی مذا ہب کا قیام کیا گیا۔   یہ ان کہانیوں کے ذریعے  قیام میں آئے  جوکہ ان کے بانیوں نے اپنے لوگوں کو  مختلف  چیزوں کے بارے میں سنائی جو ان  کی بقا کے لئے کے مفید تھیں  مثلاً  بادل، بارش اور سورج وغیرہ۔  جن کے بغیر ان کی فصلیں نہیں ہو سکتی تھیں ۔  پھر انہوں نے کائنات کے متعلق مکمل  نظریہ تعمیر کیا  کہ کس طرح یہ تما م عوامل کام کرتے ہیں ، کیوں کبھی بارش ہوتی ہے اور کبھی نہیں ۔ پھر انہوں نے لوگوں کو اس کی وجہ بتائی کہ چونکہ خدا ان سے ناراض یا خو ش ہوتا ہے  اور یہ کہ ان کو  کوئی چیز قربانی دے کر خدا کو خوش کرنا ہوتا ہے ۔  پھر انہوں نے  لوگوں کو علم کائنات پر مکمل فقہ یا شریعت دیا جس میں قربانیاں، معبودوں کے لئے تحائف، معبود کو خوش کرنے کے لئے ہفتے کے کسی خاص دن  عبادت کے لئے اکٹھا ہونا شامل تھا۔ یہاں تک کہ دنیا کے قدیم ترین مذاہب میں  یہ اصول کام کر رہا تھا۔  کائنات کا علم کسی بھی مذہب کے موضوع کا مرکز ہے۔ پھر چاہے وہ  جعلی ہو، افسانی ہو یا پھر ایک سچا مذہب۔

اس لئے آ  پ کو سمجھنے کی ضرورت ہے کہ یہ کائنات کیسے کام کر رہی ہے۔ آپ کا رب کیسے انصاف سے اس کو چلا رہا ہے۔  فقہ یا شریعت کی صحیح تفصیلات   جو پہلے سے صحائف میں  موجود ہیں بعد میں آئیں گی۔  اس بات کو ذہن میں رکھئے کہ خدا کے مذہب میں کوئی توہم پرستی نہیں ہے ۔ تمہارا ایک ہی خداوند ہے اور مذہب تم سب کے لئے ایک ہی ہے اور وہ ہے  قادر مطلق کے آگے خود سپردگی ۔ طبیعیات کے  قوانین   ہی آپکے رب کے قوانین ہیں  جو ہم دن بہ دن   دریافت کر رہے ہیں ۔ آ پ کا رب ان قوانین کے ذریعے  آپ کی اس کائنات کو چلا رہا ہے۔ صرف یہی ایک کائنات کا علم ہے باقی سب توہم پرستی ہے۔  یاد رکھئے کہ سائنس اتنی ذیادہ طاقتور ہے کہ اگر ہم آج سے صرف  ہزار سال ہی  پیچھے چلے جائیں تو  ہم اپنے سے پہلے والوں کے لئے خدا  تصور کئے جائیں گے ۔ ایک طبیعیات دان کا ایک قول ہے ” کوئی بھی جدید تر   ٹیکنالو جی الہو یت اور خدائ جیسی ہی لگتی ہے” ۔